چوہدری پرویزالٰہی نے وزیراعلیٰ پنجاب کے عہدے کا حلف اٹھا لیا

Spread the love

مسلم لیگ ق کے رہنما پرویز الہٰی نے  وزیر اعلیٰ پنجاب کے عہدے کا حلف اٹھالیا۔ گورنر پنجاب کی جانب سے حلف لینے سے انکار کے بعد صدر مملکت عارف علوی نے چوہدری پرویز الٰہی سے حلف لیا۔

تقریب حلف برداری ایوان صدر میں ہوئی جس میں مونس الہیٰ، چوہدری وجاہت حسین، موسی الہیٰ، میاں محمود الرشید، زین قریشی، ڈاکٹر مراد راس، یاسمین راشد ، سینیٹر وسیم سجاد سمیت دیگر افراد نے شرکت کی۔

واضح رہے کہ چوہدری پرویز الہٰی سپریم کورٹ کے حکم پر وزیر اعلیٰ پنجاب کا حلف اٹھانے جب گورنر ہاؤس پہنچے تو اس کے گیٹ بند ملے ۔ پرویز الہٰی کو داخلے کی اجازت نہیں ملی ۔گورنر پنجاب بلیغ الرحمان نے چوہدری پرویزالٰہی سے وزارت اعلیٰ کے عہدے کا حلف لینے سے معذرت کر لی تھی ۔ چوہدری پرویز الٰہی حلف برداری کے لیے خصوصی طیارے کے ذریعے لاہور سے اسلام آباد پہنچے ۔ گورنر پنجاب بلیغ الرحمان کے انکار کے بعد چوہدری پرویز الہیٰ حلف برداری کیلیے خصوصی طیارے سے اسلام آباد پہنچے جہاں اُن کا مونس الہیٰ نے استقبال کیا۔

خیال رہے کہ سپریم کورٹ نے ڈپٹی اسپیکر رولنگ کیس میں پرویز الٰہی کی درخواست منظور کرتے ہوئے پنجاب اسمبلی کے ڈپٹی اسپیکر دوست مزاری کی رولنگ کالعدم قرار دے دی تھی۔

چوہدری مونس الہی نے ٹوئٹ کیا کہ اللہ پاک کے فضل سے ایک مشن پورا ہو گیا ، اب دوسرے مشن کے لیے تن من دھن کی بازی لگائیں گے اور عمران خان کو وزیراعظم کی کرسی پر واپس لے کر آئیں گے ۔

دوسری جانب ملک کے سب سے بڑے صوبے کے وزیراعلیٰ چوہدری پرویزالٰہی کی تقریب حلف برداری سرکاری ٹی وی پر نشر نہیں کی گئی ۔ سابق وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے اس پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ مریم اورنگزیب کے کہنے پر پرویز الہٰی کی تقریب حلف برداری نہیں دکھائی گئی۔

فواد چوہدری نے تنبیہہ کی کہ میں بتا رہا ہوں کہ پی ٹی وی پر جو لوگ اس وقت عہدوں پر ہیں اگلے مہینے نہیں ہوں گے، اگر ان لوگوں کو بھی جیل میں جانا ہے تو ایسا کرتے رہیں، مریم اورنگزیب خود جیل جانے والی ہیں۔