25 عظیم انگریزی فلمیں جو باکس آفس پر فلاپ ہوئیں

Spread the love

امریکی باکسر محمد علی کلے پر بنائی گئی فلم سمیت باکس آفس کی 25 ناکام فلمیں

MUHAMMAD ALI
Spread the love

اسٹیون اسپیلبرگ کی "ویسٹ سائیڈ اسٹوری” اور گیلرمو ڈیل ٹورو کی "نائٹ میر ایلے”  شاندار فلم سازی کے باعث 11 بار اکیڈمی ایوارڈ کے لئے نامزد ہوئیں ۔لیکن بدقسمتی ہے کہ دونوں فلمیں باکس آفس پر اتنی ہی بری طرح فلاپ ہوئیں۔ باکس آفس کی ناکام فلموں کے معیار پر سوال نہیں اُٹھائے جا سکتے۔21 ویں صدی میں ان کے عنوانات پر تنقید کی گئی۔ اور باکس آفس میں ناکامی کی وجوہات بھی بتائی گئیں۔

قارئین کی دلچسپی کے لئے ایسی 25فلموں کی فہرست پیش کی جا رہی ہے جو اچھی سٹوری اور کاسٹ کے باوجود باکس ٓافس پر راج

نہ کر سکیں۔

1۔نائیٹ میر ایلےNIGHTMARE ALLEY

گیلرمو ڈیل ٹورو کی فلم’’نائیٹ میر ایلے‘‘ باکس آفس کی پہلی  فلم تھی جس پر 60 ملین ڈالر  خرچہ ٓایا لیکن اس فلم نے دنیا بھر میں محض 37 ملین ڈالر کمائے۔ مارٹن سکورسیز نے لوگوں سے فلم دیکھنے کی اپیل کی  لیکن اس کے باوجود لوگ فلم کو دیکھنے کے لئے نہیں آئے۔ انہوں نے’’ بریڈلی کوپر‘‘ کو ایک ایسے شخص کے طور پر دکھایا گیا ۔ جو کارنیول ورکر سے لے کر عالمی شہرت یافتہ شخصیت بن جاتا ہے۔ پیٹر ڈیبروگ نے ​​”نائٹ میئر ایلے” کو ناقدین کا انتخاب قرار دیا ۔ باکس آفس پر ناکامی  کے باوجود، "نائٹ میئر ایلے” نے اکیڈمی کے ووٹرز کو 4آسکر ایوارڈ دینے پر مجبور کیاتھا۔

2۔ویسٹ سائیڈ اسٹوری WEST SIDE STORY

اسٹیون اسپیلبرگ کی "ویسٹ سائیڈ اسٹوری” نے فلمی ناقدین کو حیران کیاتھا۔ اس کی وجوہات امریکی فلم بینوں کی جانب سے اسے یکسر نظرانداز کرنا تھا۔فلم نےصرف 38 ملین ڈالر کمائے جبکہ لاگت 73 ملین  ڈالر تھی ۔

"ویسٹ سائیڈ اسٹوری” نے آسکر کے لئے 7 بار نامزدگی حاصل کی ۔ جن میں سب سے آگے آریانا ڈی بوس کے لیے تصویر، ہدایت کار اور معاون اداکارہ کے ڈائیلاگ شامل تھے۔

3۔ان دی ہائیٹس IN THE HIGHTS

ہدایت کار جون ایم چونے کی سرپرستی  میں بننے والی  فلم ’’ ان دی ہائیٹس‘‘باکس آفس میں ناکام فلموں میں سے ایک تھی۔ فلم نے امریکہ میں صرف 29  ملین ڈالر جبکہ دنیا بھر میں 45 ملین سے کم کمائے۔

4۔ دی لاسٹ ڈوئل THE LAST DUEL


"دی لاسٹ ڈوئل" فلم  کا پروڈکشن بجٹ 100 ملین  ڈالرسے زیادہ تھا ۔ امریکہ میں صرف 10  ملین  ڈالر کی کمائی کی۔جبکہ دنیا بھر کے باکس آفس پر 30 ملین کماسکی۔ یہ فلم میٹ ڈیمن اور بین ایفلیک جیسے بڑے ناموں  کے ساتھ بھی باکس آفس پر جگہ بنانے میں ناکام رہی۔ فلم پروڈیوسر اسکاٹ نے ایک دلچسپ ، تاریخی ، رومانس، اور سیاسی چالوں سے بھرپور  ایک دلفریب ڈرامہ" تیار  کیا لیکن بدقسمتی ہے کہ  یہ بھی باکس آفس کامیاب نہ ہو سکا۔ 

The Many Saints of Newark5.

ڈیوڈ چیس کی "سوپرانوس” کی پریکوئل فلم "دی مینی سینٹس آف نیوارک” شاید وارنر برادرز کا سب سے بڑا شاہکار تھی ۔جس دن ان کی 2021 کی تمام فلمیں تھیٹروں میں نمائش کی گئی ۔ اسی روز   HBO MAX  کے ذریعے اسٹریمنگ پر ڈال دی گئیں۔

فلم نے  امریکہ میں صرف 8 ملین ڈالر  جبکہ دنیا بھر میں صرف 12 ملین ڈالر کمائے۔ اتنی کم کمائی کے باوجود اسٹوڈیو کے ایگزیکٹیو نے اس بات پر اطمینان کا اظہار کیا کہ پریکوئل سے بہترین رسپانس دیکھنے کو ملا۔پریکوئل کو "ایک جاندار اور توجہ کھینچ لینے والی اسٹوری” قرار دیا  گیا تھا۔

6۔دی سوسائیڈ سکواڈThe Suicide Squad

باکس آفس کی ناکام فلموں کی فہرست میں ’’  دی سوئی سائیڈ سکواڈ ‘‘بھی شامل ہے ۔  جیمز گن کا "دی سوسائیڈ اسکواڈ” ایک بڑا بلاک بسٹر ثابت ہوتا اگر وبائی امراض اور وارنر برادرز کا HBO میکس پر اسی وقت سینما گھروں میں فلم چلانے کا فیصلہ نہ ہوتا؟ ہم صرف امید کر سکتے ہیں، جیسا کہ فلم سے امریکہ میں 55 ملین  ڈالر اور دنیا بھر میں 167 ملین ڈالرسے کہیں زیادہ کمائی کا  اندازہ تھا ۔ لیکن 185 ملین ڈالر کے پروڈکشن بجٹ سے بنی فلم کی کمائی بہت کم رہی۔

7۔ دی ریدیم سیکشن THE RHYTHM SECTION

50 ملین ڈالر کے پروڈکشن بجٹ سے بننے والی اس فلم نے دنیا بھر میں 6 ملین  ڈالر سے بھی کم کمائی کی۔ ایکشن تھرلر فلم "دی ریتھم سیکشن” 2020 کی سب سے بڑی باکس آفس فلاپ فلموں میں سے ایک تھی۔ باصلاحیت ڈائریکٹر ریڈ مورانو (جنکی مووی "دی ہینڈ میڈز ٹیل” ایک ایمی فاتح ہے)  نے اس فلم کی ہدایتکاری کی تھی لیکن سب تدبیریں الٹی ہو گئیں اور فلم ناکام رہی ۔

8۔ایڈآسٹرا۔AD ASTRA

"Ad Astra” 100 ملین  ڈالر سے کم بجٹ   میں بننے والی اچھی فلم ہے لیکن یہ دنیا بھر سے محض 127 ملین  ڈالر ہی سمیٹ پائی۔اس فلم کو زیادہ تر امریکہ میں پذیرائی نہ ملی اور یہ باکس آفس سے محض 50 ملین ڈالر کما  سکی ۔

9۔ڈاکٹرسلیپ DOCTOR SLEEP

مائیک فلاناگن کی "ڈاکٹر سلیپ” سے توقعات بہت زیادہ تھیں کیونکہ یہ "دی شائننگ” کا سیکوئل ہے ۔ جو ہارر باکس آفس پر سب سے زیادہ منافع بخش فلموں میں سے ایک ہے۔ افسوس، فلم نے مقامی طور پر صرف 31 ملین ڈالر کا نقصان کیا۔

10۔این ہیلیشن ANNIHILATION

پیراماؤنٹ جانتا تھا کہ ایلکس گارلینڈ کی سرفہرست، وجودی سائنس فکشن تھرلر "فنا” ایک بہت بڑا خطرہ ہے اور اس نے فلم کے بین الاقوامی حقوق Netflix کو فروخت کر دیے۔”فنا” باکس آفس پر 40 ملین ڈالر کے پروڈکشن بجٹ کے باوجود امریکہ میں صرف32 ملین  ڈالر کما کر ناکام رہی۔ پورٹ مین نے حیاتیات کے پروفیسر کا کردار ادا کیا ہے جس کو حیاتیات کے ایک پراسرار قرنطین زون میں داخل ہونے کا کام سونپا گیا ہے تاکہ یہ معلوم کیا جا سکے کہ اس کے لاپتہ شوہر کے ساتھ کیا ہوا ہے۔ "فنا” باکس آفس پر فلاپ رہی، لیکن یہ 2010 کی دہائی کی بہترین سائنس فکشن فلموں میں سے ایک ہے۔

ڈیسٹرائرDESTROYER

کیرین کساما کی  جاسوس تھرلر "ڈسٹرائر” نے نیکول کڈمین کو آسکر  دلوایا لیکن امریکی باکس آفس پر صرف 1.5 ملین ڈالر کمائے۔ بین الاقوامی سطح پر، "ڈسٹرائر” نے 5.5 ملین  ڈالر کے ساتھ اپنی دوڑ ختم کی۔ اس فلم میں کڈمین نے ایک سابق پولیس افسر کا کردار ادا کیا ہے جو ایک  ایسےگینگ سے بدلہ لیتا ہے جو برسوں پہلے ایک کیس میں  ملوث تھا۔

12۔بلیڈرنرBLADE RUNNER 2040

اصل ‘بلیڈ رنر’ کو (بالآخر) اس کی غیر معمولی صلاحیت کے باعث مانا گیا تھا ۔ اس کے سیکوئل کا شمار اب تک کی عظیم سائنس فکشن فلموں میں ہوتا ہے۔ بلیڈ رنر2040 فلم امریکہ میں 100 ملین  ڈالر کا ہندسہ  بھی عبور نہ  کر پائی۔ مبینہ طور پر  اس فلم نے Alcon Entertainment کو 80 ملین  ڈالر تک کا نقصان پہنچایا۔ قطع نظر اس کے کہ فلم نے سنیماٹوگرافی اور بصری اثرات کے لیے آسکر  ایوارڈ بھی جیتا اور یہ 2010 کی دہائی کا سائنس فکشن ٹچ اسٹون بنی ۔

13۔دی اسیسینیشن آف جیسی جیمر بائی دی کوارڈ ربورڈ فورڈ

اینڈریو ڈومینک کی  اس فلم  کو وسیع پیمانے پر 21 ویں صدی کی بہترین سنیماٹوگرافی کی حامل سمجھا جاتا ہے، لیکن فلم بینوں نے بمشکل اس بات کا نوٹس لیا اور جب 2007 میں فلم  نمائش کے لئے پیش ہوئی تو اس نے امریکہ میں 3.9 ملین  ڈالر اور دنیا بھر میں صرف 11 ملین  ڈالر سے زیادہ کا بزنس کیا۔ فلم کا پروڈکشن بجٹ 30 ملین ڈالر تھا۔  ورائٹی  میگزین نے اس فلم کو 1970 کی دہائی کی بہترین  فلموں میں سے ایک قرار دیا تھا ۔

14۔چلڈرن مینCHILDREN MAN

الفانسو کیورون کی "چلڈرن مین” کو اکثر اکیسویں صدی کی سب سے بڑی سائنس فکشن فلموں میں سے ایک سمجھا جاتا ہے ۔ اس کا آغاز امریکہ میں 75 ملین ڈالر کے پروڈکشن بجٹ پر  بننے سے ہوا لیکن باکس آفس پر یہ صرف 35 ملین ڈالر کما پائی۔ یہاں تک کہ فلم کی دنیا بھر میں مجموعی کمائی 70 ملین ڈالر رہی ۔فلم کی تنقیدی پسندیدگی نے اسے آسکر کے تین نامزدگیوں تک پہنچانے میں مدد کی۔

15۔فائیٹ کلب FIGHT CLUB

شائد ہی کسی فلم کو اس کے وقت میں اس قدر اہمیت دی گئی  جتنی فائیٹ کلب کو دی گئی تھی۔  لیکن "فائٹ کلب” 1999 میں امریکی باکس آفس پر 60 ملین ڈالر کے پروڈکشن بجٹ کے ساتھ 37 ملین ڈالر کما پائی۔اور فلم بینوں نے اسے یکسر مسترد کر دیا تھا۔

16۔گرنڈہاؤسGRINDHOUSE

Quentin Tarantino ان نایاب ہدایت کاروں میں سے ایک ہیں جو بالغوں کو فلم تھیٹر میں لے جا سکتے ہیں، لیکن "Grindhouse” کے ساتھ ایسا نہیں تھا۔ کیونکہ "گرائنڈ ہاؤس” باکس آفس پر صرف 25 ملین ڈالر کمائی کے ساتھ فلاپ ہوئی ۔

17۔ہیوگوHUGO

مارٹن سکورسیز کی "ہیوگو” بھی باکس آف میں اپنا لوہا نہ منوا سکی۔ فلم   امریکہ میں 73 ملین ڈالر اور دنیا بھر میں 185 ملین ڈالر کمانے میں کامیاب ہو سکی۔ اس فلم کو بنانے کا بجٹ 170 ملین ڈالر تک چلا گیا تھا۔

18۔دی ماسٹرTHE MASTER

دی ماسٹر بھی  باکس آفس میں ناکام ہونے والی فلموں میں سے ایک تھی۔فلم کو بیک وقت  پانچ تھیٹرز میں لانچ کیا گیا۔ جو انڈی باکس آفس پراب بھی ریکارڈ پر ہے۔ اس کے باوجود یہ فلم پذیرائی حاصل نہ کر سکی اور صرف 16 ملین ڈالر کمائے ۔فلم کی ناکامی کے باوجود   کاسٹ ممبران ہوفمین، فینکس اور ایمی ایڈمز سبھی کو ان کی شاندار پرفارمنس کے لیے اکیڈمی ایوارڈ کی نامزدگی ملی ۔

19۔ان ہیرینٹ وائس INHERENT VICE

پال تھامس اینڈرسن کی ہدایت کاری  میں بننے والی فلم’’ ان ہیرینٹ وائس‘‘  کی دھوم مچانے کی توقعات کی جا رہی تھیں۔لیکن نتیجہ کچھ اور ہی نکلا۔ یہ فلم  امریکی باکس آفس پر 8 ملین ڈالر کما سکی۔ 20 ملین ڈالر کے بجٹ پر بننے والی فلم  دنیا بھر میں 14 ملین ڈالر کماسکی۔

20۔ دی آئرن جائنٹ THE IRON GIANT

"دی آئرن جائنٹ” اب تک کی سب سے بڑی اینی میٹڈ فلموں میں سے ایک ہے۔ لیکن بریڈ برڈ کی ہدایت کاری میں بننے والی فلم پر 70 ملین ڈالر اخراجات آئے اورفلم  نے صرف23 ملین ڈالر کمائے ۔

21۔مدرMOTHER

فلم”ماں” 30 ملین ڈالر  میں بنائی گئی ۔لیکن یہ  امریکہ میں 20 ملین ڈالر کا ہندسہ عبور نہ کر سکی۔

اوون گلیبرمین  کے مطابق ڈیرن آرونوفسکی کی ہیڈ ٹرپ ہارر مووی، جس میں جینیفر لارنس نے کام  کیا۔اس فلم کو بنانے کا مقصد یہ تھا  کہ ایک ہارر فلم سے باہر نکلا جائے لیکن فلم کی اسٹوری کو پذیرائی نہ مل سکی۔

22۔انڈردی سکن UNDER THE SKIN

"انڈر دی سکن” 13 ملین  ڈالر میں بنائی گئی۔ اس فلم  نے امریکہ میں  2.6 ملین ڈالر کی کمائی کی۔ اتنی کم  کمائی کے باوجود حیران کن بات یہ ہے کہ  اسے 2010 کی دہائی کی بہترین فلموں میں سے ایک سمجھا جاتا ہے۔

23۔واریرWARRIOR

گیون او کونر کی فلم "واریر” 2010 کی دہائی کے سب سے زیادہ متحرک کھیلوں کی فلموں  میں سے ایک ہے۔ فلم میں جوئل ایڈجرٹن اور ٹام ہارڈی کو بھائیوں کے طور پر کاسٹ کیا گیاتھا ۔دونوں کو مکسڈ مارشل آرٹس ٹورنامنٹ میں ایک دوسرے کے مدمقابل دکھایا گیا۔ 25 ملین ڈالر کےبجٹ میں بننے والی فلم  صرف 13 ملین ڈالرکماسکی۔

24۔سٹیوجابSTEVE JOB

’’سٹیو جابز‘‘ کا شمار بھی باکس آفس کی ناکام فلموں میں ہوتا ہے۔ اس فلم نے  گھریلو باکس آفس  میں 17 ملین   ڈالر جبکہ دنیا بھر میں 34 ملین  ڈالر کمائے۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ  فلم 30 ملین ڈالر میں بنائی گئی تھی ۔فلم کی ناکامی کے باوجود مائیکل فاس بینڈر اور کیٹ ونسلیٹ کو آسکر کے لیے نامزد کیا گیا تھا جو اسٹیو جابز اور جوانا ہوفمین کے طور پر ان کی پرفارمنس کے لیے تھے۔

25۔علی ALI

"علی”  نامی فلم عظیم امریکی باکسر محمد علی  پر بنائی گئی تھی ۔ فلم نے 87 ملین ڈالر کمائے، لیکن فلم کا بجٹ 100 ملین ڈالر سے زیادہ تھا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔