مشرقی یورپ میں اضافی امریکی فوج تعینات

Spread the love

امریکاکے صدرجوبائیڈن نے مشرقی یورپ میں امریکی فوجیوں کی تعیناتی کی منظوری دے دی ۔ آنے والے دنوں میں امریکی فوجی مشرقی یورپ میں تعینات ہوں گے۔
وال اسٹریٹ جنرل کی رپورٹ کے مطابق 2 ہزارفوجی امریکہ سے پولینڈ اور جرمنی میں تعینات کیے جائیں گے ۔ تقریباًیک ہزار جرمنی سے رومانیہ میں بھیجے جائیں گے
یوکرین کے صدر سے ڈچ وزیراعظم کی ملاقات
یوکرین کے صدر ولادیمیر زیلنسکی کا کہنا ہے کہ کیف کی توجہ صرف امن پر ہے ۔ لیکن ان کے ملک کو روس کی طرف سے کسی بھی حملے کی صورت میں اپنے دفاع کا حق حاصل ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈچ وزیراعظم مارک روٹے کے ساتھ ملاقات کےبعد میڈیا سے گفتگو میں کیا۔

برطانوی وزیراعظم کابھی دورہ کیف

برطانیہ کے وزیر اعظم بورس جانسن یوکرین کے صدر کے ساتھ صورتحال پر تبادلہ خیال کے لیے کیف پہنچے ہیں۔بورس جانسن نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ہم روس پر زور دیتے ہیں کہ وہ مزید خون خرابے سے بچنے کے لیے مذاکرات کا حصہ بنے اور مسئلے کا سفارتی حل تلاش کرے۔وہ روسی صدر سے بھی ٹیلی فونک رابطہ کریں گے اور یوکرین کے تنازعے کو بات چیت کے ذریعے حل کرنے پر زور دیں گے۔

روس کے صدر ولادی میرپیوٹن اورہنگری کے وزیراعظم کی گفتگو

روسی صدر ولادی میر پیوٹن نے کہا ہے امریکا ہمیں جنگ میں گھسیٹنے کے لئے یوکرین کو استعمال کر رہا ہے ۔ مغرب نے سکیورٹی کے حوالے سے ماسکو کے تحفظات کو نظر انداز کر دیا ہے ۔ روس اب بھی اپنے مطالبات پر امریکہ اور نیٹو کے اس ردعمل کا جائزہ لے رہا ہے جو گزشتہ ہفتے موصول ہوا تھا ۔ ہنگری کے وزیر اعظم سے بات چیت کے بعد یوکرائنی بحران کے تناظر میں بیان دیا کہ اس کا حل تلاش کرنا آسان نہیں ہو گا۔ انہوں نے یہ اشارہ بھی دیا کہ وہ مغرب کے ساتھ مزید بات چیت کے لیے تیار ہیں۔
ہنگری کے وزیراعظم نے اس موقع پر اعتراف کیا کہ مغرب اور ماسکو کے درمیان حقیقی اختلافات موجود ہیں تاہم ان کو حل کرنا ممکن ہے ۔ امریکا اور اس کے اتحادی ممالک کا کہنا ہے کہ روس نے یوکرائن کی سرحد پر ایک لاکھ سے زائد فوجی تعینات کر رکھے ہیں اور یہ کہ ماسکو یوکرائن پر حملے کی منصوبہ بندی کر رہا ہے۔

امریکی وزیرخارجہ کی روسی ہم منصب سے رابطے میں گفتگو

امریکی وزیر خارجہ انتونی بلنکن نے اپنے روسی ہم منصب سے گفتگو میں ماسکو پر زور دیا کہ وہ یوکرین کی مشرقی سرحد پر سے اپنے فوجی ہٹا کر کشیدگی میں کمی لائے۔بلنکن نے واضح کیا کہ اگر روس نے یوکرین پر حملہ کیا تو اس پر سخت ترین پابندیاں عائد کی جائیں گی۔

2 thoughts on “مشرقی یورپ میں اضافی امریکی فوج تعینات

  1. […] مختلف سمتوں سے روس پر ایٹمی حملے کی مشق کی،،، اس دوران امریکی بمبار طیاروں نے 30 سے زائد پروازیں کیں اور روسی سرحد کے […]

  2. […] ہاؤس کی ترجمان جین ساکی نے تصدیق کی کہ  صدر جوبائیڈن نے یوکرین پر روسی حملہ نہ ہونے کی شرط پر روسی ہم منصب کے […]

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔