سینیٹ اپوزیشن لیڈر نہیں جانے والے، وزیرخارجہ

Spread the love

سینیٹ کا اجلاس چئیرمین صادق سنجرانی کی زیرصدارت ہوا، وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے سینیٹ میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ اسٹیٹ بینک ترمیمی بل کے بعد ادارے کے بورڈ کی تقرری کا اختیار وزیراعظم کے پاس ہوگا، ادارے کو کسی کی غلامی کے تابع کرنے میں کوئی صداقت نہیں، اپوزیشن لیڈر یوسف رضا گیلانی نے غیرضروری وضاحتیں دیں، موجودہ اپوزیشن لیڈر ووٹ خرید کر سینیٹر منتخب ہوئے ہیں، سینیٹر دلاور نے صاف بتا دیا ہے کہ قائد حزب اختلاف انہیں بلا کر خود غائب ہو گئے

سینیٹ اجلاس میں شاہ محمود قریشی مسلم لیگ ن پر بھی برسے

وفاقی وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن کے ساتھ اپوزیشن لیڈر کیلئے اتفاق ہوا تھا پھر راتوں رات اپوزیشن لیڈر یہ خود بن گئے، ن لیگ کے ساتھ اس وقت بھی ہاتھ ہوا جمعہ کو بھی ہوا آئندہ بھی ہوگا، اپوزیشن لیڈر اپنا استعفیٰ واپس لیں گے اسی کرسی سے چپکے رہیں گے اور کہیں نہیں جائیں گے۔

شاہ محمودقریشی کا کہنا تھا کہ یہ سب جانتے ہیں، ان کا کیس آج بھی الیکشن کمیشن میں زیر سماعت ہے، ان کے صاحبزادے کی ویڈیو بھی سامنے آئی جس میں وہ ووٹ خریدنے کی بات کر رہے تھے۔

سینیٹ چئیرمین کی ایجنڈا معطل کر کے مسئلہ کشمیر پر بات کرنے کی تجویز

قائد ایوان ڈاکٹر شہزاد وسیم نے آئندہ اجلاس میں تمام ایجنڈا معطل کرکے صرف مسئلہ کشمیر پر بات چیت کرنے کی تجویز دی تو چیئرمین سینیٹ نے بتایا وزیراعظم آزاد جموں کشمیر نے بھی خط لکھ کر ایک اجلاس کشمیر میں منعقد کرنے کا کہا ہے، پانچ فروری کو تو کشمیر میں اجلاس منعقد نہیں کر پائیں گے لیکن اسی اجلاس کے دوران ایک اجلاس کشمیر میں منعقد کریں گے، اجلاس میں تمام ممالک کے سفارتکاروں کو بھی مدعو کیا جائےگا۔ سینیٹ اجلاس جمعہ کی صبح ساڑھے 10 بجے تک ملتوی کردیا گیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔