امریکا میں خاتون کے 3 بار جڑواں بچے

Thanks(Richard Agecoutay/CBC)
Spread the love

جڑواں بچوں کو پالنا آسان نہیں لیکن اگر کسی کے یکے بعد دیگرے تین جڑواں بچوں کے جوڑے پیدا ہو جائیں تو انسان کی زندگی کتنی مشکلات کا شکار ہو جاتی ہے۔ شمالی امریکا کا ایک ایسا خوش قسمت جوڑا بھی ہے جس پر قدرت اتنی مہربان ہوئی کہ 4سال کے عرصے میں 3 بار جڑواں بچوں کی پیدائش ہوئی ہے۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی اس خبر نے اس وقت لوگوں کی توجہ حاصل کرنے میں کامیاب ہوئی جب جوڑے کے گھر چار سال کے دوران تین مرتبہ جڑواں بچے پیدا ہوئے۔

رپورٹس کے مطابق شمالی امریکا سے تعلق رکھنے والی خاتون میک آرتھر کے ہاں اپنے خاندان کا آغاز 7 سال قبل بیٹے کی پیدائش ہوئی،اس کے بعد بیٹی نے دنیا میں آنکھ کھولی ، 2017 میں پہلی بار جڑواں بچوں کی پیداش کے بعد  مئی 2019 میں دوسرا جوڑا پیدا ہوا، جب کہ اس سال 29 نومبر کو  مک آرتھر تیسری بار جڑواں بچوں کی ماں بنیں۔

بشکریہ گوگل: جوڑا اپنے تیسرے نوزائیدہ جڑواں بچوں کے ہمراہ

پٹرینا اپنی کہانی سنائی کہ وہ اور ان کا خاندان ہر بار جڑواں بچوں کی خبر سن کر حیرت میں مبتلا ہو جاتے تھے لیکن طبی ماہرین نے انہیں یقین دلایا کہ ان کی صحت اس قابل ہے کہ وہ ان بچوں کو جنم دے سکتی ہیں۔

 اب شمالی امریکا کی رہائشی پٹرینا آٹھ بچوں کی ماں ہیں اور ان کا کہنا ہے کہ اب انہیں سونے  کے لیے کوئی وقت نہیں ملتا۔ ان کی زندگی صرف بچوں کے گرد گھومتی ہے لیکن جب بچوں کو ہنستا کھیلتا دیکھتی ہیں تو وہ اپنی ساری تھکن دور ہو جاتی ہے۔ قدرت نے بھی اسی ماں کو بلند رتبہ دیا ہے ، اس کے قدموں تلے جنت رکھی ہے اور باپ کو جنت کا دروازہ قرار دیا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔